افسوس که ایامِ شریفِ رمضان رفت – صائب تبریزی

افسوس که ایامِ شریفِ رمضان رفت
سی عید به یک مرتبه از دستِ جهان رفت
افسوس کہ ایامِ شریفِ رمضان گذر گئے؛ تیس عیدیں ایک ہی دفعہ دنیا کے ہاتھوں سے چلی گئیں۔

افسوس که سی پارهٔ این ماهِ مبارک
از دست به یک بار چو اوراقِ خزان رفت
افسوس کہ اس ماہِ مبارک کے سی پارے خزاں کے پتّوں کی طرح ہاتھوں سے ناگہاں چلے گئے۔

ماهِ رمضان حافظِ این گلّه بُد از گرگ
فریاد که زود از سرِ ایِن گلّه شبان رفت
ماہِ رمضان اس گلّے کا بھیڑیوں سے محافظ تھا؛ فریاد کہ بہت جلد اس گلّے کے سر سے چوپان رخصت ہو گیا!

شد زیر و زبر چون صفِ مژگان، صفِ طاعت
شیرازهٔ جمعیتِ بیداردلان رفت
صفِ مژگاں کی طرح صفِ طاعت زیر و زبر ہو گئی؛ بیدار دلوں کی جمعیت کا شیرازہ چلا گیا۔

بی‌قدریِ ما چون نشود فاش به عالم؟
ماهی که شبِ قدر در او بود نهان، رفت
(اب) ہماری بے قدری دنیا پر فاش کیسے نہ ہو؟ وہ ماہ کہ جس میں شبِ قدر نہاں تھی، چلا گیا۔

برخاست تمیز از بشر و سایرِ حیوان
آن روز که این ماهِ مبارک ز میان رفت
جس روز کہ یہ ماہِ مبارک درمیان سے گیا، (اُس روز) بشر اور دیگر حیوانوں کے مابین تمیز بھی اٹھ گئی۔

تا آتشِ جوعِ رمضان چهره برافروخت
از نامهٔ اعمال، سیاهی چو دخان رفت
جیسے ہی رمضان کی گرسنگی کی آتش نے چہرہ مشتعل کیا، نامۂ اعمال سے سیاہی دھوئیں کی طرح چلی گئی۔

با قامتِ چون تیر درین معرکه آمد
از بارِ گنه با قدِ مانندِ کمان رفت
(ماہِ رمضان) تیر جیسی قامت کے ساتھ اس معرکے میں آیا اور (ہمارے) گناہوں کے بار کے سبب کمان کی مانند قد کے ساتھ رخصت ہوا۔

برداشت ز دوشِ همه کس بارِ گنه را
چون باد، سبک آمد و چون کوه، گران رفت
(ماہِ رمضان) نے ہر شخص کے دوش سے بارِ گناہ رفع کر لیا؛ وہ ہوا کی طرح سبک آیا اور کوہ کی طرح گراں گیا۔

چون اشکِ غیوران به سراپردهٔ مژگان
دیر آمد و زود از نظر آن جانِ جهان رفت
پلکوں کے پردے پر غیرت مند لوگوں کے اشکوں کی طرح وہ جانِ جہاں دیر سے آیا اور جلد ہی نظروں سے نہاں ہو گیا۔

از رفتنِ یوسف نرود بر دلِ یعقوب
آنها که به صائب ز وداعِ رمضان رفت
جو کچھ صائب پر وداعِ رمضان سے گذرا ہے وہ یوسف کے جانے سے یعقوب کے دل پر بھی نہیں گذرتا۔

(صائب تبریزی)​

× مشتعل = شعلہ ور، برافروختہ

Advertisements


جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s