"نیست مرد آنکه بگوید پدرم بود فلان”

عربی قطعہ:
كُنْ ابنَ مَن شِئْتَ واكْتَسِبْ ادبا
يُغنيك محمودُه عن النَّسَبِ
فليس يُغْني الحسيبَ نِسْبَتُهُ
بلا لسانٍ له و لا ادبِ
اِنَّ الفتی من يقولُ هاأناذا
ليس الفتی من يقولُ كان اَبِي
(منسوب به حضرتِ علی رض)

منظوم فارسی ترجمہ:
پسرِ هر که تو باشی ادبی حاصل کن
تا غنی سازدت اخلاقِ نکو از پدران
ندهد سود کسی را حسب و نسبت هم
که نه او را ادبی باشد و نه نطق و بیان
آن جوانست که گوید منم اینک حاضر
نیست مرد آنکه بگوید پدرم بود فلان
(مولانا شوقی)

فارسی سے اردو ترجمہ:
تم جس کے بھی پسر ہو کوئی ادب حاصل کرو؛ تاکہ نیک اخلاق تمہیں آباء سے بے نیاز کر دیں۔
جس شخص کے پاس نہ کوئی ادب ہو، اور نہ نطق و بیان ہو، اُسے حسب و نسب بھی فائدہ نہیں دیتے۔
وہ شخص جوان ہے جو کہے ‘لو میں اِس وقت حاضر ہوں’؛ وہ شخص مرد نہیں ہے جو کہے ‘میرا پدر فلاں تھا’۔

Advertisements


جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s